لطف آور ہے آج کا موسم

پُر کشش اورخوشنما موسم
لطف آور ہے آج کا موسم

رخ پہ مسکان ہے کسانوں کے
لے کے برسات آگیا موسم

بن تمھارے یہ دن نہیں کٹتے
تم سے بہتر نہیں لگا موسم

سر پہ گر رنج و غم کےبادل ہیں
لائے گا کیا بھلا قضا موسم

ٹھنڈ ہو گرمی ہو یا ہو برسات
ایک رہتا نہیں سدا موسم

مہ جبینوں کے ہوش اڑجائیں
اپنا جلوہ ذرا دکھا موسم

آج "شاداب” ہے بہت شاداب
کیونکہ اچھا اسے ملا موسم

(پُر کشش اورخوشنما موسم)
(لطف آور ہے آج کا موسم)

از قلم :- شاداب اعظمی
چریاکوٹ مئو


دل کے چین و قرار کا موسم

چاہا تھا قربت کا موسم

کتنا تھا البیلا موسم

Share this on

متعلقہ اشاعت

بحر موجی كا تعارف

بحر موجی كا تعارف نام: دیا شنکر تخلص: بحر موجی تاریخ ولادت: 9 ستمبر 1911 جائےولادت: داؤد گنج، ضلع ایٹہ، اتر پردیش، بھارت تعلیم: جھانسی

مزید پڑھیں

امن لکھنوی كا تعارف

امن لکھنوی كا تعارف نام: گوپی ناتھ سریواستوا تخلص: امن لکھنوی تاریخ ولادت: 16 ستمبر یا 21 اکتوبر 1898 جائےولادت: لکھنؤ، اترپردیش، بھارت تعلیم: امن

مزید پڑھیں

شاکر بریلوی كا تعارف

شاکر بریلوی كا تعارف نام: کالکا پرشاد مہروترا تخلص: شاکر بریلوی سن ولادت: 1892 جائےولادت: بریلی، اترپردیش، بھارت شاکر بریلوی کے والد منگل سین مہروترا

مزید پڑھیں

شمیم کرہلوی كا تعارف

شمیم کرہلوی كا تعارف نام: دیا شنکر سکسینہ تخلص: شمیم کرہلوی سن ولادت: 1895 جائےولادت: قصبہ دھرمنگدر پور، اترپردیش، بھارت جناب شمیم کرہلوی نے الہ آباد

مزید پڑھیں

This Post Has One Comment

جواب دیں